موت کے کھیل!!

  • 18 اپریل 2021
موت کے کھیل!!

 

 
الازہر انٹر نیشنل سنٹر برائے الیکٹرانک فتوی  نے "ٹک ٹوک" ویڈیو ایپلی کیشن کے "نیلے رنگ کے اسکارف" یا "بلیک آؤٹ" چیلنج کے خطرے سے خبردار کیا ہے، جو اپنے صارفین کو دعوت دیتا ہے کہ  کمرے کو تاریک کرنے کے بعد شدید تاریکی اور گھٹن کے ماحول میں اپنی ویڈیو بنائیں ۔ بہت سے افراد نے حقیقت میں  اپنی سانسیں روکنے اور خود کو موت کے سامنے لانے کے بعد اپنی ہی ویڈیوز شیئر کیں، افسوس کہ ان میں سے کچھ کا کھیل موت میں بدل گیا۔ 
یہ چیلنج ہمارے مذہب اور انسانی فطرت  کے بالکل منافی ہے۔ کیونکہ اگر اس کا نتیجہ موت بھی نہ ہوا تو کم از کم اس سے دماغ کے خلیوں پر بہت برا اثر پڑتا ہے۔ اور اس سے انسانی شعور کو نقصان پہنچنے کا اندیشہ ہے
اسی لئے الازہر انٹرنیشنل سنٹر برائے الیکٹرانک فتویٰ نے  ان  کھیلوں اور چیلنجوں کو حرام قرار دیا ہے جیسا کہ فرمان باری تعالی ہے: {وَلَا تُلْقُوا بِأَيْدِيكُمْ إِلَى التَّهْلُكَةِ  وَأَحْسِنُوا  إِنَّ اللَّهَ يُحِبُّ الْمُحْسِنِينَ} (اور اپنے آپکو خود اپنے ہاتھوں ہلاکت میں نہ ڈالو اور نیکی اختیار کرو، بے شک اللہ نیکی کرنے والوں سے محبت کرتا ہے) [بقره: 195]
رسول ﷺ نے فرمايا: "مومن خود کو ذلیل نہ کرے"۔ پوچھا گیا: مومن اپنے آپ کو ذلیل کیسے کر سکتا ہے؟ رسول نے فرمايا: "اپنے آپ کو اتنی اذیت دے کہ وہ کھڑا ہی نہ ہو سکے" ۔ الترمذی
الازہر انٹرنیشنل سينٹر برائے الیکٹرانک فتویٰ والدین، میڈیا اور تعلیمی اداروں سے مطالبہ کرتا ہے کہ اس طرح کے کھیلوں کے خطرات، اور ان کے جسمانی، نفسیاتی اور خاندانی نقصانات پر روشنی ڈالیں اور اس سے لوگوں کو خبردار کرے۔ سينٹر اس بات پر زور دیتا ہے کہ قوم کے فرزندوں کو تمام قومی متحرکہ اداروں کے ساتھ تعاون کرنا چاہیئے تا کہ انکو اس مغربی ثقافت کے خطرات سے آگاہی ہو 'جو کہ قومی فکر وشعور کے لئے زہر قاتل اور تباہ کن ثابت ہو سکتے ہیں'  اور ان افکار کی ترویج کو روکنے کے لئے سیسہ پلائی ہوئی دیوار کی مانند کھڑے ہوں۔
Print

Please login or register to post comments.

 

دہشت گردى كا خاتمہ اور ايك " باعزت زندگى" (حياة كريمة) كا آغاز
اتوار, 12 ستمبر, 2021
        دہشت گردی كی کوئی ایسی تعریف کرنا جو کہ ہر لحاظ سے مکمل اور ہر موقع پر سو فیصد اتفاق رائے سے لاگو کی جا سکے، اگر ناممکن نہیں تو کم از کم انتہائی مشکل ضرور ہے۔ اگر ہر قسم کے پس منظر اور كسى بهى  معاشرے کے حالات...
سربيا كے وزير خارجہ اور معاون وفد كا الازہر آبزرويٹرى كا دوره
پير, 23 اگست, 2021
وفد کا الازہر آبزرویٹری کا دورہ: آج پیر ۲۳ ‎ اگست کو سربیا کے وزیر خارجہ "نیکولا سلاکوچ" اور ان کے ہمراہ وفد نے دہشت گردی اور انتہا پسندی کے خلاف جنگ میں الازہر الشریف کی کوششوں کے بارے میں جاننے کے لیے الازہر آبزرویٹری کا دورہ کیا۔...
عورت ؛اسلام كى روشنى ميں
منگل, 27 جولائی, 2021
اسلام نے  عورت کو اعلى مقام ديا ہے،  اسلام كى نظر ميں انسانى لحاظ سے مرد اور عورت  دونوں  برابر ہيں – لہذا مرد کے لیے اس کی مردانگی قابلِ فخر نہیں ہے اور نہ عورت کے لیے اس کی نسوانیت باعثِ شرم كى بات ہے - ہر فرد کی...
123456789Last

ازہرشريف: چھيڑخوانى شرعًا حرام ہے، يہ ايك قابلِ مذمت عمل ہے، اور اس كا وجہ جواز پيش كرنا درست نہيں
اتوار, 9 ستمبر, 2018
گزشتہ کئی دنوں سے چھيڑ خوانى كے واقعات سے متعلق سوشل ميڈيا اور ديگر ذرائع ابلاغ ميں بہت سى باتيں كہى جارہى ہيں مثلًا يه كہ بسا اوقات چھيڑخوانى كرنے والا اُس شخص كو مار بيٹھتا ہے جواسے روكنے، منع كرنے يا اس عورت كى حفاظت كرنے كى كوشش كرتا ہے جو...
فضیلت مآب امام اکبر کا انڈونیشیا کا دورہ
بدھ, 2 مئی, 2018
ازہر شريف كا اعلى درجہ كا ايک وفد فضيلت مآب امامِ اكبر شيخ ازہر كى سربراہى  ميں انڈونيشيا كے دار الحكومت جاكرتا كى ‏طرف متوجہ ہوا. مصر کے وفد میں انڈونیشیا میں مصر کے سفیر جناب عمرو معوض صاحب اور  جامعہ ازہر شريف كے سربراه...
شیخ الازہر کا پرتگال اور موریتانیہ کی طرف دورہ
بدھ, 14 مارچ, 2018
فضیلت مآب امامِ اکبر شیخ الازہر پروفیسر ڈاکٹر احمد الطیب ۱۴ مارچ کو پرتگال اور موریتانیہ کی طرف روانہ ہوئے، جہاں وہ دیگر سرگرمیوں میں شرکت کریں گے، اس کے ساتھ ساتھ ملک کے صدر، وزیراعظم، وزیر خارجہ اور صدرِ پارلیمنٹ سے ملاقات کریں گے۔ ملک کے...
1345678910Last

دہشت گردى كا خاتمہ اور ايك " باعزت زندگى" (حياة كريمة) كا آغاز
        دہشت گردی كی کوئی ایسی تعریف کرنا جو کہ ہر لحاظ سے مکمل اور ہر موقع پر سو فیصد اتفاق رائے سے لاگو کی جا سکے، اگر...
اتوار, 12 ستمبر, 2021
عورت ؛اسلام كى روشنى ميں
منگل, 27 جولائی, 2021
1345678910Last

دہشت گردى كے خاتمے ميں ذرائع ابلاغ كا كردار‏
                   دہشت گردى اس زيادتى  كا  نام  ہے جو  افراد يا ...
جمعه, 22 فروری, 2019
اسلام ميں مساوات
جمعرات, 21 فروری, 2019
دہشت گردى ايك الميہ
پير, 11 فروری, 2019
1345678910Last