مساجد كے بند ہونے كى حالت ميں نماز جنازه كہاں پڑھى جائے؟

  • 26 مارچ 2020
مساجد كے بند ہونے كى حالت ميں نماز جنازه كہاں پڑھى جائے؟

نماز جنازه كے لئے مسجد ميں پڑھنا  شرط نہيں ہے، بلكہ اُس كو كسى بھى پاك اور صاف جگہ ميں پڑھا جا سكتا ہے حضور ﷺ كا  فرمان ہے " وجعلت لي الأرض مسجدًا وطهورا" {ہم سے محمد بن سنان نے بيان كيا، انہوں نے كہا ہم سے ہشيم نے بيان كيا،  انہوں نے كہا ہم سے ابو الحكم سيار نے بيان كيا، انہوں نے كہا  ہم سے يزيد فقير نے كہا ہم سے جابر بن عبد اللہ رضى اللہ عنهما نے كہ رسول اللہ ﷺ نے فرمايا- مجھے پانچ اايسى چيزيں عطا كى گئى ہيں جو مجھ سے پہلے انبياء كو نہيں دى گئى تھيں- ايك مہينے كى راه سے ميرا  رعب ڈال كر ميرى مدد كى گئى ميرے لئے تمام زمين ميں نماز پڑھنے اور پاكى حاصل كرنے كى اجازت ہے- اس لئے ميرى امت كے جس آدمى كى نماز  كا وقت ( جہاں بھى) آجائے اسے (وہيں) نماز پڑھ لي چاہئے- ميرے لئے مال غنيمت حلال كيا گيا- پہلے انبياء خاص اپنى قوموں كى ہدايت كے لئے بھيجے جاتے تھے- ليكن مجھے دنيا كے تمام انسانوں كى ہدايت كے لئے بھيجا  گيا- مجھے شفاعت عطا كى گئى ہے}- ( صحيح بخارى- پہلا پار- كتاب صلاه-  باب  نبى كريم ﷺ كا ارشاد كہ ميرے لئے سارى زمين پر نماز پڑھنے اور پا كى حاصل كرنے( يعنى تيمم كرنے) كى اجازت ہے-نمبر419)

​بعض فقہا اور علمائے دين كى رائے ہے كہ نماز جنازه كو مسجد كے باہر  پڑھنا  بہتر  ہے- امام السندى نے نماز جنازه كے بارے ميں كہا" جى ہاں، مسجد سے باہر پڑھنا بہتر  ہے، كيونكہ وه زياده تر مسجد سے باہر  ہى پڑھى جاتى تھى"( حاشيہ السندى على ابن ماجہ ، 298/3)-

​امام بخارى  كے ہاں دونوں حالتيں؛ يعنى كہ نماز جنازه كو مسجد كے باہر يا اندر  پڑھنا جائز ہے-}  ہم سے يحى بن بكير نے بيان كيا، انہوں نے كہا كہ ہم سے ليث نے بيان كيا،ان سے عقيل نے بيان كيا، ان سے ابن شہاب نے بيان كيا، ان سے سعيد بن مسيب اور ابو سلمہ نے بيان كيا، اور ان دونوں حضرات سے ابو ہريره رضى اللہ عنه نے روايت كيا كہ نبى كريم ﷺ نے حبشہ كے نجاشى كى وفات كى خبر دى، اسى دن  جس دن  ان كا انتقال ہوا تھا- آپ نے فرمايا كہ اپنے بھائى كے لئے خدا سے مغفرت چاہو-  اور ابن شہاب سے يوں بھى  روايت ہے انہوں نے كہا كہ مجھ سے سعيد بن مسيب نے بيان كيا كہ ابو ہريره رضى اللہ عنه نے فرمايا كہ كہ نبى كريم ﷺ نے عيد گاه ميں صف بندى كرائى پھر ( نماز جنازه كى) چار تكبيريں كہيں{- ( صحيح بخارى- كتاب جنائز- باب نماز جنازه عيد گاه ميں اور مسجد ميں ( ہر دو جگہ جائز ہے)- رقم1263)

​چنانچہ كوويڈ 19 جسے خطرناك وبائى مرض كے ہوتے ہونے نماز جنازه مسجدوں كے باہر يا قبرستان  ميں پڑھى جا سكتى ہے- واللہ تعالى اعلم

Print
Categories: اہم خبريں
Tags:

Please login or register to post comments.

 

عورت ؛اسلام كى روشنى ميں
منگل, 27 جولائی, 2021
اسلام نے  عورت کو اعلى مقام ديا ہے،  اسلام كى نظر ميں انسانى لحاظ سے مرد اور عورت  دونوں  برابر ہيں – لہذا مرد کے لیے اس کی مردانگی قابلِ فخر نہیں ہے اور نہ عورت کے لیے اس کی نسوانیت باعثِ شرم كى بات ہے - ہر فرد کی...
‎”امام، پوپ اور مشکل راستہ" انسانی اخوت کی دستاویز کے مختلف مراحل پر لکھی جانے والی ایک تاریخی کتاب ہے، جو اس سال قاہرہ انٹرنیشنل بک فئیر میں الازہر اور مسلم علما کونسل کے کارنر میں دستیاب ہے
اتوار, 4 جولائی, 2021
  ‎۔ اس کتاب کے مصنف جسٹس محمد عبد السلام ہیں، جو انسانی اخوت  کی اعلی کمیٹی کے سیکریٹری جنرل اور پروفیسر ڈاکٹر احمد الطیب شیخ الازہر کے سابق مشیرکار  بھی ہیں۔ ‎شیخ الازہر پروفیسر ڈاکٹر احمد الطیب اور رومن کیتھولک...
ازہر شريف: رفیوجیز دوگنے مشکلات اور بحرانوں کا سامنا کررہے ہیں۔ عالمی برادری پر ان کی حمایت اور حفاظت فرض ہے۔
پير, 21 جون, 2021
  ازہر شريف ساری دنیا کو جدید دور کے تارکینِ وطن کے مسائل کی یاد دلاتی ہے ... جن میں سے قدیم ترین مسئلہ "فلسطینی مہاجرین كا مسئلہ" ہے۔ 20 جون پناہ گزینوں کا عالمى_دن ہے؛ اس موقع پر ازہر شریف تمام دنیا کے ممالک سے مطالبہ كرتا...
123468910Last

ازہرشريف: چھيڑخوانى شرعًا حرام ہے، يہ ايك قابلِ مذمت عمل ہے، اور اس كا وجہ جواز پيش كرنا درست نہيں
اتوار, 9 ستمبر, 2018
گزشتہ کئی دنوں سے چھيڑ خوانى كے واقعات سے متعلق سوشل ميڈيا اور ديگر ذرائع ابلاغ ميں بہت سى باتيں كہى جارہى ہيں مثلًا يه كہ بسا اوقات چھيڑخوانى كرنے والا اُس شخص كو مار بيٹھتا ہے جواسے روكنے، منع كرنے يا اس عورت كى حفاظت كرنے كى كوشش كرتا ہے جو...
فضیلت مآب امام اکبر کا انڈونیشیا کا دورہ
بدھ, 2 مئی, 2018
ازہر شريف كا اعلى درجہ كا ايک وفد فضيلت مآب امامِ اكبر شيخ ازہر كى سربراہى  ميں انڈونيشيا كے دار الحكومت جاكرتا كى ‏طرف متوجہ ہوا. مصر کے وفد میں انڈونیشیا میں مصر کے سفیر جناب عمرو معوض صاحب اور  جامعہ ازہر شريف كے سربراه...
شیخ الازہر کا پرتگال اور موریتانیہ کی طرف دورہ
بدھ, 14 مارچ, 2018
فضیلت مآب امامِ اکبر شیخ الازہر پروفیسر ڈاکٹر احمد الطیب ۱۴ مارچ کو پرتگال اور موریتانیہ کی طرف روانہ ہوئے، جہاں وہ دیگر سرگرمیوں میں شرکت کریں گے، اس کے ساتھ ساتھ ملک کے صدر، وزیراعظم، وزیر خارجہ اور صدرِ پارلیمنٹ سے ملاقات کریں گے۔ ملک کے...
12345678910Last

روزه اور قرآن
  رمضان  كے رروزے ركھنا، اسلام كے پانچ  بنيادى   اركان ميں سے ايك ركن ہے،  يہ  ہر مسلمان بالغ ،عاقل ، صحت...
اتوار, 24 اپریل, 2022
حجاب اسلام كا بنيادى حصہ
جمعه, 25 مارچ, 2022
اولاد کی صحیح تعلیم
اتوار, 6 فروری, 2022
اسلام ميں حقوقٍ نسواں
اتوار, 6 فروری, 2022
12345678910Last

دہشت گردى كے خاتمے ميں ذرائع ابلاغ كا كردار‏
                   دہشت گردى اس زيادتى  كا  نام  ہے جو  افراد يا ...
جمعه, 22 فروری, 2019
اسلام ميں مساوات
جمعرات, 21 فروری, 2019
دہشت گردى ايك الميہ
پير, 11 فروری, 2019
12345678910Last