جب مدد مانگو تو الله سے مانگو

  • 21 مارچ 2019
جب مدد مانگو تو الله سے مانگو

اسلامى عقائد اور اس كى شريعت ہر اس چيز سے متفق ہے جس كا  اقرار عقل سليم كرتى ہے،  اور  فى الحقيقت جس بهى  چيز كا اقرار عقل كرتى ہے ، اس كا اقرار اسلام  بهى كرتا ہے  اور ان دونوں كے درميان كوئى تضاد نہيں پايا جاتا اور نہ  ہى پايا جانا چاہيے.

جن امور كا اقرار عقلِ سليم كرتى ہے ان ميں يہ بهى ہے كہ انسان كسى ايسے شخص سے ہى مددمانگ سكتا ہے جو مدد  كرنے كى قدرت ركهتا ہو، ليكن اگر انسان كسى ايسے كے پاس جائے جو اپنى مدد خود نہيں كر سكتا تو يہ بات غير قابل قبول ہوگى، يہى وجہ ہے كہ اسلام سختى كے ساتھ ہر طرح كے مكر وفريب،  عقائدى خرافات، تو ہم پرستى اور علم غيب كے دعوى داروں كے پاس جانا يا قبر والوں سے صحت يابى اور دشمن كى ہلاكت كے لئے يا ضرورت پورى ہونے كے لئے ان سے مدد مانگنا يہ سب ايسى باتيں ہيں جسے نہ تو عقل قبول كرتى ہے اور نہ ہى دين-

اس سلسلہ ميں اسلام كا موقف بالكل واضح ہے اور اس ميں تاويل كى گنجائش نہيں ہے اور وه يہ ہے كہ مطلوبہ مقصد تك پہنچانے والے اسباب كو اختيار كرنے كے بعد صرف اور صرف الله سے مدد طلب كرنا، تنہا صرف الله تعالى كى ذات ہے جو غيب كا علم ركهتى ہے اور وه تنہا ہے جس كے ہاتھ  ميں ہر چيز كى كنجى ہے "عالم الغيب فلا يظهر على غيبه أحدًا (26) إلا من ارتضى من رسول فإنه يسلك  من بين يديه ومن خلفه رصدًا" (وه غيب كا جاننے والا ہے اور اپنے غيب پر كسى كو مطلع نہيں كرتا (26) سوائے اس پيغمبر كے جسے وه پسند كرلے ليكن اس كے بهى آگے پيچهے پہرے دار مقر كرديتا ہے) (سورۂ جن: 26: 27)-

تنہا الله ہى مدد كے طلب كا مستحق ہے "إياك نعبد وإياك نستعين" (ہم صرف تيرى ہى عبادت كرتے ہيں اور صرف تجھ ہى سے مدد چاہتے ہيں) (سورۂ فاتحہ: 5)-

وہى دعائيں قبول كرنے والا ہے، وہى حاجتوں كو پورى كرتا ہے اور وہى رزق كا ضامن ہے "ادعونى أستجب لكم" (مجھ سے دعا كرو ميں تمہارى دعاؤں كو قبول كروں گا يقين مانو" (سورۂ غافر: 60)-

اس كا مطلب يہ ہے كہ الله تعالى اور انسان كے درميان كوئى حائل نہيں ہے، ان دونوں كے درميان براه راست تعلق ہے-

اس بات كى تاكيد كے لئے نبى ﷑ فرماتے ہيں: "جب آپ كچھ مانگو تو  الله تعالى سے مانگو اور اگر مدد طلب كرو تو وه بهى الله تعالى سے طلب كرو."

اس طرح اسلام نے كسى بهى مخلوق كے سامنے دين  كے نام پر انسانوں كو غلام بنانے يا ان كو نفع ونقصان پہنچانے كا دعوى كرنے والوں كے سامنے تمام دروازے بند كرديئے ہيں كيونكہ نفع اور نقصان صرف الله تعالى كى مرضى سے ہوتا ہے جس نے اسباب كو پيدا كيا، ہميں عقل كى نعمت سے نوازا، جو ہميں سيدها راستہ دكهاتا ہے اور  اس پر چلنے كى   طاقت سے  ديتا  ہے .

Print
Categories: مضامين
Tags:

Please login or register to post comments.

 

نئى تاريخى دستاويز ات ... فلسطينى عوام كے خلاف قابض صہيونى جرائم كى گواه

صہيونى  اخبار"ہارٹس" نے   اپنے  گزشتہ ہفتہ وارضميمہ ميں   چند  تاريخى دستاويزات كے حوالے سے ايك رپورٹ  شائع كى،   يہ  دستاويزات- 1948ء سے  فلسطينى   زمين پر...

كهيل... تعارف اور ہم آہنگى

     مرصد الازہر برائے انسدادِ انتہا پسندى  نے  مصر ميں منعقد ہونے والے افريكان ورلڈ كپ كى مناسبت سے "كهيل ... تعارف اور ہم آہنگى" كے نام سے آج صبح ايك آگاہى  مہم  كا آغاز كيا،  جو 12 زبانوں...

انسانيت كے نام ايك دستاويز

     "انسانى بهائى چاره (اخوت) كى دستاويز" كہہ ديں يا "انسانيت كى  دستاويز"، شيخ الازہر اور وٹيكن كے پوپ نے چند مہينوں پہلے  فرورى ميں ايك عالمى اور تاريخى دستاويز پر دستخط كى، جس كا مقصد دنيا...

نیوزی لینڈ كى مسجد ميں نمازيوں پر خوفناك دہشتگردانہ حملے كے بارے ميں فضيلتِ مآب شيخ الازہرڈاكٹر احمد الطيب كا بيان

نمازِ جمہ كے دوران نيوزيلينڈ كے  كرائسٹ چرچ ميں ايك  مسجد پر  دہشت گرد حملہ   كى خبروں كو ميں نہايت  غم واداسى سے ديكھ رہا ہوں،جس كے نتيجہ ميں   پچاس افراد ہلا ك اور  اتنى ہى تعداد ميں  لوگ زخمى...

1345678910Last

ازہرشريف: چھيڑخوانى شرعًا حرام ہے، يہ ايك قابلِ مذمت عمل ہے، اور اس كا وجہ جواز پيش كرنا درست نہيں
اتوار, 9 ستمبر, 2018
گزشتہ کئی دنوں سے چھيڑ خوانى كے واقعات سے متعلق سوشل ميڈيا اور ديگر ذرائع ابلاغ ميں بہت سى باتيں كہى جارہى ہيں مثلًا يه كہ بسا اوقات چھيڑخوانى كرنے والا اُس شخص كو مار بيٹھتا ہے جواسے روكنے، منع كرنے يا اس عورت كى حفاظت كرنے كى كوشش كرتا ہے جو...
فضیلت مآب امام اکبر کا انڈونیشیا کا دورہ
بدھ, 2 مئی, 2018
ازہر شريف كا اعلى درجہ كا ايک وفد فضيلت مآب امامِ اكبر شيخ ازہر كى سربراہى  ميں انڈونيشيا كے دار الحكومت جاكرتا كى ‏طرف متوجہ ہوا. مصر کے وفد میں انڈونیشیا میں مصر کے سفیر جناب عمرو معوض صاحب اور  جامعہ ازہر شريف كے سربراه...
شیخ الازہر کا پرتگال اور موریتانیہ کی طرف دورہ
بدھ, 14 مارچ, 2018
فضیلت مآب امامِ اکبر شیخ الازہر پروفیسر ڈاکٹر احمد الطیب ۱۴ مارچ کو پرتگال اور موریتانیہ کی طرف روانہ ہوئے، جہاں وہ دیگر سرگرمیوں میں شرکت کریں گے، اس کے ساتھ ساتھ ملک کے صدر، وزیراعظم، وزیر خارجہ اور صدرِ پارلیمنٹ سے ملاقات کریں گے۔ ملک کے...
1345678910Last

حقوق كى ادائيگى ايك پُر امن اور خوبصورت معاشرے كى بنياد
     ہم كسى نہ كسى حيثيت ميں  ايك دوسرے كے حقوق  ادا كرنے كے ذمہ دار ہيں، حضور پاكؐ نے فرمايا:" ايك  مسلمان كے...
هفته, 2 نومبر, 2019
علما كے حقوق اورفرائض
بدھ, 9 اکتوبر, 2019
قرآن ميں عورت
منگل, 8 اکتوبر, 2019
ملازموں كے حقوق
منگل, 1 اکتوبر, 2019
123578910Last

دہشت گردى كے خاتمے ميں ذرائع ابلاغ كا كردار‏
                   دہشت گردى اس زيادتى  كا  نام  ہے جو  افراد يا ...
جمعه, 22 فروری, 2019
اسلام ميں مساوات
جمعرات, 21 فروری, 2019
دہشت گردى ايك الميہ
پير, 11 فروری, 2019
1345678910Last