مرد وعورت حقوق اور واجبات ميں برابر ہیں

  • 6 جون 2017
مرد  وعورت  حقوق اور واجبات ميں برابر ہیں

فرمانِ الہى ہے: "اے لوگو! اپنے پر وردگار سے ڈرو، جس نے تمہیں ايک جان سے پيدا كيا" اس آيتِ كريمہ ميں لوگوں كا خطاب مرد اور عورت دونوں كے لئے ہے ، اس بناپر ہم كہہ سكتے ہيں کہ انسانى اعتبار سے مرد اور عورت دونوں مساوى اور ہم رتبہ ہیں. جب قرآن كريم انسان يا بنى آدم كے متعلق گفتگو كرتا ہے تو اس سے مقصود مرد اور عورت دونوں ہوتے ہیں "يقينا ہم نے اولادِ آدم كو بڑى عزت دي" (اسراء: ۷۰) اور ہمارے پيارے نبى محمد صل الله عليه وآله وصحبہ وسلم نے فرمايا كہ "عورتيں مردوں ہى كى طرح ہیں اور جس كى طرح ان كى ذمہ دارياں ہیں اسى طرح ان كے حقوق بهى ہیں"،  يعنى:  عورت مرد كا جز ہے اور  نيك کاموں میں سوائے ان کے درمیان کوئی فرق نہیں ہے-

Image

افسوس ہے كہ كچھ مسلمان مرد   خواتين پر  بوسيده تقاليد اور باطل عادات كى وجہ سےظلم ڈهاتے ہیں جو كہ اسلام كے احكام  سے نا  واقفيت  اور اس كى تعليمات  سے غلط فہمى كى دليل ہے  اسلام نے خواتين كو عزت اور بلند مرتبہ ديا  مثال کے طور پر:

  • اسلام نے عورت كو مالى معاملات ميں مرد سے مكمل خود مختارى عطا كى ہے اسے اپنى ملكيت ميں تصرف كرنے كى مكمل آزادى حاصل ہے خواه خريد وفروخت كرے يا تحفہ دے يا سرمايہ كارى كرے، اس كے شوہر كو اور نا كسى قريبى رشتہ دار كو يہ حق حاصل ہے كہ وه اس كى اجازت كے بغير اس كے مال ميں سے كچھ لے-
  • كسى مرد كے لئے خواه وه والد ہی كيوں نہ ہو روا نہیں كہ وه اپنى بيٹى  كو كسى ايسے شخص سے شادى كرنے پر مجبور كرے جسے وه پسند نہ كرتى ہو، بلكہ از حد ضرورى ہے كہ لڑكى كى شادى اس كى رضا مندى كے مطابق ہو
  • نبى كريم نے فرمايا كہ: "تم ميں سے ايكـ محافظ ونگہبان ہے اور ہر ايكـ ذمہ دار ہے، پس حاكم نگہبان ہے اور اپنى رعايا كا ذمہ دار ہے اور شوہر اپنے اہل وعيال كا محافظ ونگراں ہے اور اپنى رعيت كا ذمہ دار ہے اور شوہر بهى اپنے  گهر كا نگراں اور ذمہ دار ہے"... قرآن كريم ميں ارشادِ بارى ہے كہ: "تم آپس ميں ايكـ دوسرے كے جز ہو" جس سے ثابت ہوتا  ہے کہ ان ميں سے ہر ايك دوسرے كے لئے مكمل ہونے كا ذريعہ ہے اور ايكـ دوسرے كى باہمى مشاركت كے بغير زندگى كا صحيح ڈگرپر چلنا ممكن ہی نہیں ہے،  ايك اچهى اور تعليم يافتہ ماں ہى اپنے بچوں كى صحيح تربيت كرسكے گي، ايك پڑهى لكهى بہن  اور بيٹى اپنے حقوق اور واجبات كى صحيح حفاظت كرنے پر قادر ہوگى، رسول اكرم نے جنت كو ماؤں كے قدموں تلے ٹهہرايا اور بيٹيوں كى  پرورش كو اپنے باپ كےجنت ميں داخل ہونے كى وجہ بنائى، زندگى مرد اور عورت كے بغير مكمل نہيں ہوسكتى  دونوں كے وجود سے زندگى ميں توازن پيدا ہوتا ہے اسى لئے اس كى حفاظت كرنا دراصل زندگي كى حفاظت كرنے كے مترادف ہے.

 

Print

Please login or register to post comments.

 

كيا غير مسلمانوں سے دوستى ركهنا گناه ہے؟؟

    غير مسلمانوں كے ساتھ معاملات ميں كبهى كبهى ہمارے  ذہن ميں كئى سوال نمودار ہوسكتے ہيں ، جيسے كہ  دوستی اور عدم تعلقی کس کيلئے ہو !؟ اور کفار سے دوستی کا کيا حکم ہے!؟كچھ لوگوںكا كہنا ہے كہ  کافروں سے ايسی دوستی...

الازہر_الشریف ویینا میں ہونے والے دہشت گرد حملوں کی شدید مذمت کرتا ہے

  الازہر_الشریف اور شیخ_الازہر پروفیسر ڈاکٹر احمد_الطیب، آسٹریا کے دارالحکومت ویینا میں گذشتہ گھنٹوں کے دوران ہونے والے دہشت گردانہ حملوں کی سخت مذمت کرتے ہیں۔ الازہر الشریف نے تاکید کی کہ ایک جان کو ہلاک کرنا ساری انسانیت کو قتل کرنے...

شیخ الازہر USAID کے صدر سے ملاقات کے دوران: جنگوں اور نفرتوں کو روکنا دنیا کے مسائل حل کرنے کا آسان ترین طریقہ ہے

  یو ایس ایڈ کے صدر: ہم دنیا میں نفرت اور دہشت گردی کی جڑوں کے خاتمے کے لئے الازہر کے ساتھ تعاون کرنے کے خواہاں ہیں۔  گزشتہ دنوں شیخ الازہر پروفیسر ڈاکٹر احمد الطیب نے واشنگٹن میں امریکی ایجنسی برائے بین الاقوامی ترقی کے قائم مقام...

شیخ الازہر ڈاکٹر احمد الطیب”اسلامی دہشت گردی” جیسی اصطلاح کی شدید مذمت کرتے ہوئے اس کے استعمال کو جرم قرار دینے کا مطالبہ کرتے ہیں۔

     شیخ الازہر ڈاکٹر احمد الطیب نے مغربی ممالک کے بعض زمہ داران اور عہدیداروں کے “اسلامی دہشت گردی” کی اصطلاح کا استعمال کرنے کے اصرار پر شدید غم و غصہ کا اظہار کرتے ہوئے کہا: وہ اس بات سے بے خبر ہیں کہ اس قسم کی...

1345678910Last

ازہرشريف: چھيڑخوانى شرعًا حرام ہے، يہ ايك قابلِ مذمت عمل ہے، اور اس كا وجہ جواز پيش كرنا درست نہيں
اتوار, 9 ستمبر, 2018
گزشتہ کئی دنوں سے چھيڑ خوانى كے واقعات سے متعلق سوشل ميڈيا اور ديگر ذرائع ابلاغ ميں بہت سى باتيں كہى جارہى ہيں مثلًا يه كہ بسا اوقات چھيڑخوانى كرنے والا اُس شخص كو مار بيٹھتا ہے جواسے روكنے، منع كرنے يا اس عورت كى حفاظت كرنے كى كوشش كرتا ہے جو...
فضیلت مآب امام اکبر کا انڈونیشیا کا دورہ
بدھ, 2 مئی, 2018
ازہر شريف كا اعلى درجہ كا ايک وفد فضيلت مآب امامِ اكبر شيخ ازہر كى سربراہى  ميں انڈونيشيا كے دار الحكومت جاكرتا كى ‏طرف متوجہ ہوا. مصر کے وفد میں انڈونیشیا میں مصر کے سفیر جناب عمرو معوض صاحب اور  جامعہ ازہر شريف كے سربراه...
شیخ الازہر کا پرتگال اور موریتانیہ کی طرف دورہ
بدھ, 14 مارچ, 2018
فضیلت مآب امامِ اکبر شیخ الازہر پروفیسر ڈاکٹر احمد الطیب ۱۴ مارچ کو پرتگال اور موریتانیہ کی طرف روانہ ہوئے، جہاں وہ دیگر سرگرمیوں میں شرکت کریں گے، اس کے ساتھ ساتھ ملک کے صدر، وزیراعظم، وزیر خارجہ اور صدرِ پارلیمنٹ سے ملاقات کریں گے۔ ملک کے...
124678910Last

كيا غير مسلمانوں سے دوستى ركهنا گناه ہے؟؟
    غير مسلمانوں كے ساتھ معاملات ميں كبهى كبهى ہمارے  ذہن ميں كئى سوال نمودار ہوسكتے ہيں ، جيسے كہ  دوستی اور عدم تعلقی...
جمعرات, 12 نومبر, 2020
جہاد كے معانى
جمعرات, 5 نومبر, 2020
مذہبى آزادى
منگل, 13 اکتوبر, 2020
اسلام ميں اقليتوں كےحقوق
منگل, 28 جولائی, 2020
245678910Last

دہشت گردى كے خاتمے ميں ذرائع ابلاغ كا كردار‏
                   دہشت گردى اس زيادتى  كا  نام  ہے جو  افراد يا ...
جمعه, 22 فروری, 2019
اسلام ميں مساوات
جمعرات, 21 فروری, 2019
دہشت گردى ايك الميہ
پير, 11 فروری, 2019
124678910Last