انسانى تعلقات

  • 24 ستمبر 2017
انسانى تعلقات

انسان ايك سماجى اور معاشرتى مخلوق  ہے، يعنى انسان صرف اور صرف سماج ہى ميں زندگى گزار سكتا ہے، كيونكہ اس كى فطرت ميں يہ وديعت كى گئى ہے كہ وه انسانى تعلقات كے ساتھ انسانوں كے ما بين بود وباش اختيار كرےـ آپس ميں اپنے تجربے اور كار آمد چيزوں كا تبادلہ كرے اور نفع بخش چيزوں ميں ايک دوسرے سے تعاون بهى كرے كيونكہ سماج اور معاشرے اسى پر قائم وبرقرار رہتے ہیں اور زندگى كے مختلف شعبوں ميں ترقى كى منزليں طے كرتے ہیں جس كے نتيجہ ميں انسانى زندگى بہتر اور با معنى ہوجاتى ہے-

          متوازن معاشره وه ہے جس كے تمام افراد ہم آہنگى كے ساتھ زندگى گزار رہے ہوں اور يہ چيز ايسى ہے جس كى تكميل ضمير كى تربيت، اخلاق اور دينى اقدار كى صحيح سمجھ كے ذريعہ ہو سكتى ہے، اور دينى كيفيت كے ساتھ باطنى كيفيت كے تعاون سے فرد كى ايک ايسى مكمل شخصيت بنائى جا سكتى ہے جو سماج اور سوسائٹى كو ايک ايسے مضبوط اور مستحكم عمارت كى طرح بنا دے جس كا ايک حصہ دوسرے حصہ كو تقويت پہنچائے-

          اسلام كا اخلاقى نظام دو اہم ضابطوں پر منحصر ہے، ايک تو داخلى كيفيت يا ضمير ہے دوسرا ايمان كى شكل ميں دينى كيفيت ہے، اور يہ دونوں ايک ساتھ خير وبهلائى كى طرف انسان كى ہدايت اور رہنمائى ميں ممد ومعاون ثابت ہوتے ہیں اور دونوں اسلام كے اخلاقى التزام كى ترجمانى كرتے ہیں-

          اسلام كا مقصد انسانى تعلقات كو ہر طرح كى عيوب اور برائيوں سے پاک وصاف كرنا ہے، اسى لئے اسلام نے كسى فرد يا جماعت كا مذاق اڑانے سے منع كيا ہےاسى طرح دوسروں كے احساسات وجذبات كو كسى بهى صورت ميں مجروح كرنے كى ممانعت بھى كى گئى ہے-

Image

          انسانى سماج اپنے تعلقات كے لحاظ سے ايک مخلوط اور الجها ہوا سماج ہے اور ايسى وحدت كى ترجمانى كرتا ہے جو تمام انسانوں كو ايک دائرے ميں جمع كرتا ہے، اس كا مطلب يہ ہے كہ سارى انسانيت كا انجام ايک مشترک انجام ہے اس كا مطلب  يہ ہے كہ انسانيت كو ہلاكت وبربادى سے اتحاد اور تعاون كے ذريعہ ہی بچايا جا سكتا ہے، اسى طرح امن واستقرار كے لئے تمام لوگوں كى بهلائى باہمى تعاون كے ذريعہ خطرات كو دور كرنے ميں ہے. ہم ميں سے ہر فرد كو يہ اچھى طرح جان لينا چاہيے كہ وه اس معاشره كا ايك حصہ ہے اور معاشره اس وقت تك مكمل نہيں ہو سكتا جب تك اس كے ہر فرد كو زمہ دارى كا احساس نہ ہو ، اپنے اوپر عائد حقوق وواجبات كو جان كر ہى ہم اس معاشره  كى تعمير كرنے ميں حصہ لے سكتے ہيں ، اور يہى ہر مسلمان كا واجب ہے ،  آباد كرنا نہ كہ برباد كرنا .

Print

Please login or register to post comments.

 

شیخ الازہر USAID کے صدر سے ملاقات کے دوران: جنگوں اور نفرتوں کو روکنا دنیا کے مسائل حل کرنے کا آسان ترین طریقہ ہے

  یو ایس ایڈ کے صدر: ہم دنیا میں نفرت اور دہشت گردی کی جڑوں کے خاتمے کے لئے الازہر کے ساتھ تعاون کرنے کے خواہاں ہیں۔  گزشتہ دنوں شیخ الازہر پروفیسر ڈاکٹر احمد الطیب نے واشنگٹن میں امریکی ایجنسی برائے بین الاقوامی ترقی کے قائم مقام...

شیخ الازہر ڈاکٹر احمد الطیب”اسلامی دہشت گردی” جیسی اصطلاح کی شدید مذمت کرتے ہوئے اس کے استعمال کو جرم قرار دینے کا مطالبہ کرتے ہیں۔

     شیخ الازہر ڈاکٹر احمد الطیب نے مغربی ممالک کے بعض زمہ داران اور عہدیداروں کے “اسلامی دہشت گردی” کی اصطلاح کا استعمال کرنے کے اصرار پر شدید غم و غصہ کا اظہار کرتے ہوئے کہا: وہ اس بات سے بے خبر ہیں کہ اس قسم کی...

الازہر آبزرویٹری: اسپین میں دو خواتین پر حملہ ایک جارحانہ سلوک اور ایک انتہا پسند عمل ہے۔

  پچھلے ہی دنوں ہسپانوی شہر “ملاگا” میں ایک گلی میں دو مسلمان خواتین کو نفسیاتی اور جسمانی طور پر ہراساں کیا گیا جو یوروپین ممالک میں مسلمانوں کے خلاف انتہا پسند رویوں کے اضافہ کا ثبوت ہے۔   آبزرویٹری اس بات کی تصدیق...

امن و سلامتی کے عالمی دن کی مناسبت سے الازہر آبزرویٹری: امن و سلامتی انسانیت اور انسانی رشتوں کی اصل بنیاد ہے

      ہر سال اکیس ۲۱ ستمبر کو دنیا بھر میں “امن کا عالمی دن” منایا جاتا ہے، جسے اقوامِ متحدہ کی جنرل اسمبلی نے ۱۹۸۱ میں امن وسلامتی کی اہمیت اور ضرورت پر تاکید کرنے کے لئے منظور کیا تھا۔ قرآن مجید نے دسیوں برس...

123457910Last

شاہ بحرین کے استقبال کے دوران : ہم بحرینی قوم کی یکجہتی اور اس کی استقلالیت کی تایید کرتے ہیں اور اس کے اندرونی مسائل میں دخل اندازی نہ کرنے کی دعوت دیتے ہیں۔
جمعرات, 28 اپریل, 2016
شاہ بحرین : حقیقی اسلامی ثقافت کی حفاظت کے لۓ ازہر شریف کے کردار کی اہمیت کی تعریف بیان کرتے ہیں۔ آج فضیلت مآب امام اکبر نے شاہ بحرین "حمدین عيسى آل خلیفہ" اور ان کی رفقت میں موجود وفد کا استقبال کیا جو آج کل قاہرہ کے دورے پر ہیں۔...
امام اکبر کے مونستر شہر میں تاریخی ہال "السلام" کے دورے کے دوران: "معاشروں کے مابین امن وامان، انٹر ریلجس ڈائیلاگ سے شروع ہوتا ہے"
جمعرات, 17 مارچ, 2016
جرمن شہر مونستر کے میئر کی دعوت پر فضیلت امام اکبر شیخ ازہر اور مسلم علماء کونسل کے سربراہ پروفیسر ڈاکٹر احمد الطیب  نے  تاریخی "السلام" ہال کا دورہ کیا جس میں 1648ء میں عقائدی جنگ کو ختم کرنے کے لۓ امن وسلام کے معاہدے پر...
مونسٹر یونیورسٹی میں امام اکبر کا خیر مقدم..
جمعرات, 17 مارچ, 2016
امام اکبر کچھ دیر بعد "مذاہب میں امن وامان کی بنیادیں" کے عنوان سے ایک تقریر پیش کریں گے۔ فضیلت امام اکبر شیخ ازہر اور مسلم علماء کونسل کے سربراہ پروفیسر ڈاکٹر احمد الطیب  "مذاہب میں امن وامان کی بنیادیں" کے عنوان سے ایک...
First45679111213

مذہبى آزادى
  اپنے مذہب اختيار كرنے كا حق انسان كا اولين حق ہے۔ ڈاكٹر سعيد كامل معوض كہتے ہيں كہ "اسلام ميں اپنا عقيده (اختيار كرنے) كى آزادى...
منگل, 13 اکتوبر, 2020
اسلام ميں اقليتوں كےحقوق
منگل, 28 جولائی, 2020
معلمّ انسانيت
بدھ, 22 جولائی, 2020
اسلام دین رحمت ہے
منگل, 7 جولائی, 2020
12345678910Last

دہشت گردى كے خاتمے ميں ذرائع ابلاغ كا كردار‏
                   دہشت گردى اس زيادتى  كا  نام  ہے جو  افراد يا ...
جمعه, 22 فروری, 2019
اسلام ميں مساوات
جمعرات, 21 فروری, 2019
دہشت گردى ايك الميہ
پير, 11 فروری, 2019
12345678910Last