مذہب پسندى يا تعصب!!

4

  • 27 جنوری 2017
مذہب پسندى يا تعصب!!

عصرِحاضر میں تشدد کی صورتوں ميں سے ایک، كسى خاص جماعت یا پارٹی کےاہداف ومقاصد يا اس كےسربراه  يا  افرادكے لئے بے جا حمایت یا تعصب بھی ہے، جو كسى دوسرے گروه يا جماعت  يا حتى كہ عام مسلمانوں كےساتھ متفق ہونے يا انكےساتھ وفادارى كواپنےاصولوں كى خلاف ورزى كرنا سمجهتےہيں، اور بعض اسی کوحقیقی ديندارى يامذہب پسندى گردانتےہیں، لیکن اسلام نے اس کی ممانعت کی ہے۔

فرمان الہى ہے : {(یاد رکھو) سارے مسلمان بھائی بھائی ہیں پس اپنے دو بھائیوں میں ملاپ کرادیا کرو، اور اللہ سے ڈرتے رہو تاکہ تم پر رحم کیا جائے۔} (الحجرات: 10)

اللہ رب العزت نےایمان اور نیک کام کو دين كى بنیاد بنائى ہے، اور اسی كے بنا پر لوگوں كى قدر ومنزلت كا تعين ہوتا ہے ارشاد بارى ہے: {اے لوگو! ہم نے تم سب کوایک (ہی) مرد وعورت سے پیدا کیاہے اور اس لیےکہ تم آپس میں ایک دوسرے کو پہچانو کنبے اور قبیلے بنا دیئےہیں، اللہ کےنزدیک تم سب میں سے باعزت وہ ہے جو سب سے زیادہ ڈرنے والا ہے۔  یقین مانو کہ اللہ دانا اور باخبرہے} (الحجرات: 13)

اللہ تعالى نے اپنی قدرت کی نشانيوں کی وضاحت کرتے ہوۓ فرمایا: {اس (کی قدرت) کی نشانیوں میں سےآسمانوں اور زمین کی پیدائش اورتمہاری زبانوں اور رنگتوں کا اختلاف (بھی) ہے، دانشمندوں کےلیے اس میں یقینا بڑی نشانیاں ہیں} (الروم: 22)

امت اور انسان پر تشدد کے  مرتبہ منفی اثرات کی وجہ سے اسلام نے اس كى شدید مذمت کى ہے۔ تشدد، انسان کو برے رویےاور غير اخلاقى سلوك اپنانے پر مجبور کردیتا ہے،کیونکہ متعصب شخص دوسروں کى راۓ کا احترام كرنے سے عاجز ہوجاتا ہے جس کی وجہ سے وہ بعض اوقات دوسروں پر ظلم یا زیادتی کا باعث بھى بن سكتا ہے،اور اپنے خیالات یا نظریہ  كو صحيح ثابت كرنے  کی خاطر جھوٹ  بھى بولنے سے گریز نہیں کرتا۔

بےشک فکری تشدد کے نتیجہ میں دینی، مذہبىاور فكرى انتہا پسندی جنم لیتی ہے، جودین کی صورت کو ساری دنیا کے سامنے مسخ کرديتی ہے اور دین سے قريب ہونے كے بجائےلوگاس سے دوری اختیار کرلیتے ہیں، اس طرح مسلمان رواداری اورامن وسلامتى کے بجاۓ انتہاپسندی کےعلمبردارہوجاتے ہیں جو اسلامی تعلیمات اور اس کے اصل جوہر کے بالکل منافی ہے۔

 

Print

Please login or register to post comments.

 

سماجی ہم آہنگی اور مذہبی رواداری میں تعلیم کا کردار

تعلیم کسی بھی قوم یا معاشرے کےلئے ترقی کی ضامن ہے۔  یہی تعلیم قوموں کی ترقی اور زوال کی وجہ بنتی ہے۔ تعلیم حاصل کرنے کا مطلب صرف سکول ،کالج یونیورسٹی سے کوئی ڈگری لینا نہیں بلکہ اسکے ساتھ تعمیر اور تہذیب سیکھنا بھی شامل ہے تاکہ انسان اپنی...

شريعت كے عمومى مقاصد (2)‏

 يہ بات  ہم پہلے بيان كر چكے ہيں كہ تمام شرعى احكام كا مركز اور محور، يا تو ان اہم بنيادى مقاصد كى حفاظت ہے( شريعت كے عمومى مقاصد 1 پڑهيں ) جو انسان كى تعمير وترقى اور تمدن  ميں سنگِ ميل كى حيثيت ركهتے ہيں اور  جن كے بغير دنيا...

ازہرشريف: چھيڑخوانى شرعًا حرام ہے، يہ ايك قابلِ مذمت عمل ہے، اور اس كا وجہ جواز پيش كرنا درست نہيں

گزشتہ کئی دنوں سے چھيڑ خوانى كے واقعات سے متعلق سوشل ميڈيا اور ديگر ذرائع ابلاغ ميں بہت سى باتيں كہى جارہى ہيں مثلًا يه كہ بسا اوقات چھيڑخوانى كرنے والا اُس شخص كو مار بيٹھتا ہے جواسے روكنے، منع كرنے يا اس عورت كى حفاظت كرنے كى كوشش كرتا ہے جو...

اسلامى اخلاق كى خصوصيات

            اسلام ميں اخلاق كو چند خصوصيات اور امتيازات حاصل ہيں جو باقى تمام فلسفى مذاہب كى ديگر تمام اخلاقى نظاموں سے مختلف ہيں،  اسلامى اخلاقى نظام كى اہم ترين خصوصيات مندرجہ ذيل ہيں: - اخلاقى مسائل كى...

First567810121314Last

ازہرشريف: چھيڑخوانى شرعًا حرام ہے، يہ ايك قابلِ مذمت عمل ہے، اور اس كا وجہ جواز پيش كرنا درست نہيں
اتوار, 9 ستمبر, 2018
گزشتہ کئی دنوں سے چھيڑ خوانى كے واقعات سے متعلق سوشل ميڈيا اور ديگر ذرائع ابلاغ ميں بہت سى باتيں كہى جارہى ہيں مثلًا يه كہ بسا اوقات چھيڑخوانى كرنے والا اُس شخص كو مار بيٹھتا ہے جواسے روكنے، منع كرنے يا اس عورت كى حفاظت كرنے كى كوشش كرتا ہے جو...
فضیلت مآب امام اکبر کا انڈونیشیا کا دورہ
بدھ, 2 مئی, 2018
ازہر شريف كا اعلى درجہ كا ايک وفد فضيلت مآب امامِ اكبر شيخ ازہر كى سربراہى  ميں انڈونيشيا كے دار الحكومت جاكرتا كى ‏طرف متوجہ ہوا. مصر کے وفد میں انڈونیشیا میں مصر کے سفیر جناب عمرو معوض صاحب اور  جامعہ ازہر شريف كے سربراه...
شیخ الازہر کا پرتگال اور موریتانیہ کی طرف دورہ
بدھ, 14 مارچ, 2018
فضیلت مآب امامِ اکبر شیخ الازہر پروفیسر ڈاکٹر احمد الطیب ۱۴ مارچ کو پرتگال اور موریتانیہ کی طرف روانہ ہوئے، جہاں وہ دیگر سرگرمیوں میں شرکت کریں گے، اس کے ساتھ ساتھ ملک کے صدر، وزیراعظم، وزیر خارجہ اور صدرِ پارلیمنٹ سے ملاقات کریں گے۔ ملک کے...
245678910Last

اشیاء میں اصل "جواز" ہے
         اشیاء میں اصل جواز ( اس كا جائز ہونا) ہے. ايك مشہور فقہى قاعده ہے كہ "الأصل في الأشياء الإباحة "، اس...
جمعه, 20 ستمبر, 2019
يتيموں كے حقوق
جمعرات, 19 ستمبر, 2019
فريضۂ حج
پير, 2 ستمبر, 2019
اولاد كے حقوق
پير, 2 ستمبر, 2019
245678910Last

دہشت گردى كے خاتمے ميں ذرائع ابلاغ كا كردار‏
                   دہشت گردى اس زيادتى  كا  نام  ہے جو  افراد يا ...
جمعه, 22 فروری, 2019
اسلام ميں مساوات
جمعرات, 21 فروری, 2019
دہشت گردى ايك الميہ
پير, 11 فروری, 2019
245678910Last