انسانى تعلقات

  • 24 ستمبر 2017
انسانى تعلقات

انسان ايك سماجى اور معاشرتى مخلوق  ہے، يعنى انسان صرف اور صرف سماج ہى ميں زندگى گزار سكتا ہے، كيونكہ اس كى فطرت ميں يہ وديعت كى گئى ہے كہ وه انسانى تعلقات كے ساتھ انسانوں كے ما بين بود وباش اختيار كرےـ آپس ميں اپنے تجربے اور كار آمد چيزوں كا تبادلہ كرے اور نفع بخش چيزوں ميں ايک دوسرے سے تعاون بهى كرے كيونكہ سماج اور معاشرے اسى پر قائم وبرقرار رہتے ہیں اور زندگى كے مختلف شعبوں ميں ترقى كى منزليں طے كرتے ہیں جس كے نتيجہ ميں انسانى زندگى بہتر اور با معنى ہوجاتى ہے-

          متوازن معاشره وه ہے جس كے تمام افراد ہم آہنگى كے ساتھ زندگى گزار رہے ہوں اور يہ چيز ايسى ہے جس كى تكميل ضمير كى تربيت، اخلاق اور دينى اقدار كى صحيح سمجھ كے ذريعہ ہو سكتى ہے، اور دينى كيفيت كے ساتھ باطنى كيفيت كے تعاون سے فرد كى ايک ايسى مكمل شخصيت بنائى جا سكتى ہے جو سماج اور سوسائٹى كو ايک ايسے مضبوط اور مستحكم عمارت كى طرح بنا دے جس كا ايک حصہ دوسرے حصہ كو تقويت پہنچائے-

          اسلام كا اخلاقى نظام دو اہم ضابطوں پر منحصر ہے، ايک تو داخلى كيفيت يا ضمير ہے دوسرا ايمان كى شكل ميں دينى كيفيت ہے، اور يہ دونوں ايک ساتھ خير وبهلائى كى طرف انسان كى ہدايت اور رہنمائى ميں ممد ومعاون ثابت ہوتے ہیں اور دونوں اسلام كے اخلاقى التزام كى ترجمانى كرتے ہیں-

          اسلام كا مقصد انسانى تعلقات كو ہر طرح كى عيوب اور برائيوں سے پاک وصاف كرنا ہے، اسى لئے اسلام نے كسى فرد يا جماعت كا مذاق اڑانے سے منع كيا ہےاسى طرح دوسروں كے احساسات وجذبات كو كسى بهى صورت ميں مجروح كرنے كى ممانعت بھى كى گئى ہے-

Image

          انسانى سماج اپنے تعلقات كے لحاظ سے ايک مخلوط اور الجها ہوا سماج ہے اور ايسى وحدت كى ترجمانى كرتا ہے جو تمام انسانوں كو ايک دائرے ميں جمع كرتا ہے، اس كا مطلب يہ ہے كہ سارى انسانيت كا انجام ايک مشترک انجام ہے اس كا مطلب  يہ ہے كہ انسانيت كو ہلاكت وبربادى سے اتحاد اور تعاون كے ذريعہ ہی بچايا جا سكتا ہے، اسى طرح امن واستقرار كے لئے تمام لوگوں كى بهلائى باہمى تعاون كے ذريعہ خطرات كو دور كرنے ميں ہے. ہم ميں سے ہر فرد كو يہ اچھى طرح جان لينا چاہيے كہ وه اس معاشره كا ايك حصہ ہے اور معاشره اس وقت تك مكمل نہيں ہو سكتا جب تك اس كے ہر فرد كو زمہ دارى كا احساس نہ ہو ، اپنے اوپر عائد حقوق وواجبات كو جان كر ہى ہم اس معاشره  كى تعمير كرنے ميں حصہ لے سكتے ہيں ، اور يہى ہر مسلمان كا واجب ہے ،  آباد كرنا نہ كہ برباد كرنا .

Print

Please login or register to post comments.

 

امن و سلامتی کے عالمی دن کی مناسبت سے الازہر آبزرویٹری: امن و سلامتی انسانیت اور انسانی رشتوں کی اصل بنیاد ہے

      ہر سال اکیس ۲۱ ستمبر کو دنیا بھر میں “امن کا عالمی دن” منایا جاتا ہے، جسے اقوامِ متحدہ کی جنرل اسمبلی نے ۱۹۸۱ میں امن وسلامتی کی اہمیت اور ضرورت پر تاکید کرنے کے لئے منظور کیا تھا۔ قرآن مجید نے دسیوں برس...

روہنگيا مسلمان.... ايك حل طلب بحران

     12 مختلف زبانوں ميں روہنگيا مسلمانوں كے مسئلہ پر ايك بار پهر روشنى ڈالنے كے لئے الازہر آبزرويٹرى برائے انسداد انتہا پسندى  كى جانب سے اس شائع كرده ويڈيو كا ہدف دنيا كے ہر لہجہ ميں برادرى كى انسانى اور سياسى زمہ دارى كو...

قرآن پاک کو جلانا نفرت کے جذبات کو ہوا دیتا ہے اور بین المذاہب مکالمہ کے نتائج کو نقصان پہنچاتا ہے

قرآن پاك کو جلانے كى جرات ركهنے والے مجرموں كو يہ اچهى طرح جان لينا چاہيےکہ یہ جرائم ہر معیار سے وحشیانہ دہشت گردی ہیں ، یہ ایک ايسى نفرت انگیز نسل پرستی اور دہشت گردى  ہے جس كو تمام انسانی تہذیبیں رد كرتى ہیں ، بلکہ يہى اعمال ہى  دنيا...

وَلَا تُفْسِدُوا فِي الْأَرْضِ!! (اور ملك میں خرابی نہ کرنا)

          زندگى ايك نعمت ہے، اس كى حفاظت كے لئے او ر اس كرۂ ارض پر   ايك معزز اور مكرم طريقہ سے رہنے كے لئے الله رب العزت نے كچھ اصول وضوابط مقرر كئے۔ يہ اصول وضوابط الله سبحانہ وتعالى نے اپنے...

123456810Last

ازہرشريف: چھيڑخوانى شرعًا حرام ہے، يہ ايك قابلِ مذمت عمل ہے، اور اس كا وجہ جواز پيش كرنا درست نہيں
اتوار, 9 ستمبر, 2018
گزشتہ کئی دنوں سے چھيڑ خوانى كے واقعات سے متعلق سوشل ميڈيا اور ديگر ذرائع ابلاغ ميں بہت سى باتيں كہى جارہى ہيں مثلًا يه كہ بسا اوقات چھيڑخوانى كرنے والا اُس شخص كو مار بيٹھتا ہے جواسے روكنے، منع كرنے يا اس عورت كى حفاظت كرنے كى كوشش كرتا ہے جو...
فضیلت مآب امام اکبر کا انڈونیشیا کا دورہ
بدھ, 2 مئی, 2018
ازہر شريف كا اعلى درجہ كا ايک وفد فضيلت مآب امامِ اكبر شيخ ازہر كى سربراہى  ميں انڈونيشيا كے دار الحكومت جاكرتا كى ‏طرف متوجہ ہوا. مصر کے وفد میں انڈونیشیا میں مصر کے سفیر جناب عمرو معوض صاحب اور  جامعہ ازہر شريف كے سربراه...
شیخ الازہر کا پرتگال اور موریتانیہ کی طرف دورہ
بدھ, 14 مارچ, 2018
فضیلت مآب امامِ اکبر شیخ الازہر پروفیسر ڈاکٹر احمد الطیب ۱۴ مارچ کو پرتگال اور موریتانیہ کی طرف روانہ ہوئے، جہاں وہ دیگر سرگرمیوں میں شرکت کریں گے، اس کے ساتھ ساتھ ملک کے صدر، وزیراعظم، وزیر خارجہ اور صدرِ پارلیمنٹ سے ملاقات کریں گے۔ ملک کے...
123456810Last

وَلَا تُفْسِدُوا فِي الْأَرْضِ!! (اور ملك میں خرابی نہ کرنا)
          زندگى ايك نعمت ہے، اس كى حفاظت كے لئے او ر اس كرۂ ارض پر   ايك معزز اور مكرم طريقہ...
جمعه, 14 اگست, 2020
اسلام ميں اقليتوں كےحقوق
منگل, 28 جولائی, 2020
معلمّ انسانيت
بدھ, 22 جولائی, 2020
اسلام دین رحمت ہے
منگل, 7 جولائی, 2020
اور اپنے آپ کو قتل نہ کرو!
اتوار, 10 مئی, 2020
123456810Last

اسلام امن وسلامتى كا مذہب ہے
                 الله تعالى نے  دنيا ميں اپنے پيغام كو لوگوں تك پہنچانے كے لئے انبيا اور رسولوں...
اتوار, 18 نومبر, 2018
تعاون كى قيمت
منگل, 13 نومبر, 2018
انسان كون ہے‎!‎؟
بدھ, 17 اکتوبر, 2018
قتلِ مسلم ‏
اتوار, 14 اکتوبر, 2018
123578910Last